پھر رواں ھے تری جانب کوئی سیلاب نگر

Test 2

پھر رواں ھے تری جانب کوئی سیلاب نگرنیند سے جا گ مرے خواب نگر خواب نگر میں نے جب کھولے تھے لنگر تو وہ فرحاں آباداور جب لوٹ کے پلٹا تو تهہ آب نگر اے مرے شھر جنو

مزید »

اب کے پھولوں نے کڑی خود کو سزا دی ہوگی

Test 2

اب کے پھولوں نے کڑی خود کو سزا دی ہوگیراہ گلشن کی خزاؤں کو دکھا دی ہو گی جب وہ آیا تو کوئی در، کوئی کھڑکی نہ کُھلیاس نے آنے میں بہت دیر لگا دی ہو گی جا! تری پ

مزید »

غزل نما

Test 2

یہ وسعتِ نظر کا کمال تھا ہر طرف تو اور تیرا خیال تھا   بد گمانو کو بھی خوش گمان تھا یہ بھی کرشمہ حسن و جمال تھا   گزار تو لیا ہے تیرے بغیر بھی

مزید »

پھول، خوشبو، بہار کچھ بھی نہیں

Test 2

پھول، خوشبو، بہار کچھ بھی نہیں  وہ نہیں تو دیار کچھ بھی نہیں    کون کس پر یقین کیسے کرے؟ چاہتوں کا معیار کچھ بھی نہیں   باخدا کچھ نہیں

مزید »

لوٹ کر پھر وہ اسیرانِ قفس بھی آئے

Test 2

لوٹ کر پھر وہ اسیرانِ قفس بھی آئے پھول شاخوں پہ چلو اب کے برس بھی آئے   سبز جھیلوں میں اُترنے لگے خوابوں کے پرند شاخِ مژگاں پہ تری نیند کا رَس بھی آ

مزید »

درد کا کاروبار، توبہ ھے

Test 2

درد کا کاروبار، توبہ ھے عشق سر پر سوار توبہ ھے   رات آنکھوں میں کٹ گئ ساری آپ کا انتظار، توبہ ھے   تمکو ڈر ھے تمھیں بُھلا ہی نہ دیں اے مرے غمگس

مزید »

مسکرانے میں بڑی دیر لگی

Test 2

مسکرانے میں بڑی دیر لگی  آزمانے میں بڑی دیر لگی   اسکو کھونے میں تو اک پل نہ لگا جس کو پانے میں بڑی دیر لگی   ھم کو بھی اس سے محبت تھی مگر

مزید »

عجب نہیں ہے، کہ الزام میں نہیں آتا

Test 2

عجب نہیں ہے، کہ الزام میں نہیں آتا ہمارا نام کسی نام میں نہیں آتا   میں کھولتا ہوں بدن کی گرہ تسلسل سے مگرجنون کی افہام میں نہیں آتا   کسے مل

مزید »

انکار بھی نہیں ھے تو اقرار بھی نہیں

Test 2

انکار بھی نہیں ھے تو اقرار بھی نہیں وہ شخص دل لگانے کو تیار بھی نہیں   سوچا تو دور دور تلک فاصلہ ملا دیکھا تو صحن میں کوئی دیوار بھی نہیں   دونو

مزید »